اُردو پوائنٹ پکوان

شکر قندی کی کھیر


دودھ کو ہلکی آنچ پر رکھ دیں
کڑھ کر جب تین پیالیوں کے قریب رہ جائے تو تیار کی ہوئی شکر قندی اس میں ڈال دیں
شکر قندی کو چھلنی سے بھی نکال سکتی ہیں یا تھوڑے سے دودھ کے ساتھ بلینڈر کے ساتھ بھی پیس سکتی ہیں
اس طرح کھیر میں کوئی گٹھلی نہیں رہے گی
ساتھ ہی چینی بھی ڈال دیں اور چمچ چلاتی جائیں
جونہی کھیر گاڑھی ہوجائے، کسی ڈش میں ڈال لیں
نوٹ:
یہ کھیر بڑوں کے لیے یا دعوت پر بھی تیار کی جاسکتی ہے
اس صورت میں دودھ کو اور گاڑھا کرلیں
تھوڑے سے چھلے ہوئے بادام پیس کر ڈال لیں
ڈش میں ڈال کر اوپر پستے کی ہوائیاں ڈال کر سجالیں
اسی طرح آلوؤں کی کھیر تیار کی جاسکتی ہے
اگر بچیوں کے کسی خانہ داری کے امتحان میں بچے کے لیے ایسی غذا تیار کرنے کے لیے کہا جائے جو دودھ پسند نہیں کرتا اور اسے نشاستے کی بھی ضرورت ہے تو شک قندی یا آلوؤں کی کھیر بنا کر پورے نمبر حاصل ہوں گے

ترکیب کا مکمل متن پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے
اُردو پوائنٹ پکوان کا مرکزی صفحہ